القرآن الحکیم (اردو ترجمہ)

حضرت شاہ عبدالقادر

سورۃ سباء

Previous           Index           Next

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ

 

الْحَمْدُ لِلَّهِ الَّذِي لَهُ مَا فِي السَّمَاوَاتِ وَمَا فِي الْأَرْضِ

 سب خوبی (حمد) اﷲ کی ہے، جس کا ہے جو کچھ ہے آسمان و زمین میں،

وَلَهُ الْحَمْدُ فِي الْآخِرَةِ ۚ

اور اسی کی تعریف ہے آخرت میں۔

وَهُوَ الْحَكِيمُ الْخَبِيرُ

اور وہی ہے حکمتوں والا سب جانتا۔

.1

يَعْلَمُ مَا يَلِجُ فِي الْأَرْضِ وَمَا يَخْرُجُ مِنْهَا  

جانتا ہے جو پیٹھتا (داخل ہوتا) ہے زمین میں، اور جو نکلتا ہے اس سے،

وَمَا يَنْزِلُ مِنَ السَّمَاءِ وَمَا يَعْرُجُ فِيهَا ۚ

اور جو اُترتا ہے آسمان سے، اور جو چڑھتا ہے اس میں،

وَهُوَ الرَّحِيمُ الْغَفُورُ

اور وہی ہے رحم والا بخشتا۔

.2

وَقَالَ الَّذِينَ كَفَرُوا لَا تَأْتِينَا السَّاعَةُ ۖ

 اور کہنے لگے منکر، نہ آئے گی ہم پر وہ گھڑی۔

قُلْ بَلَى وَرَبِّي لَتَأْتِيَنَّكُمْ عَالِمِ الْغَيْبِ ۖ

تُو کہہ، کیوں نہیں؟ قسم ہے میرے رب کی، البتہ آئے گی تم پر، اُس چھپے جاننے والے کی۔

لَا يَعْزُبُ عَنْهُ مِثْقَالُ ذَرَّةٍ فِي السَّمَاوَاتِ وَلَا فِي الْأَرْضِ  

غائب نہیں ہو سکتا اُس سے کچھ ذرّہ بھر آسمانوں میں نہ زمین میں،

وَلَا أَصْغَرُ مِنْ ذَلِكَ وَلَا أَكْبَرُ إِلَّا فِي كِتَابٍ مُبِينٍ

اور اور کوئی چیز نہیں اس سے چھوٹی نہ اس سے بڑی، جو نہیں ہے کھلی کتاب (لوحِ محفوظ) میں۔

.3

لِيَجْزِيَ الَّذِينَ آمَنُوا وَعَمِلُوا الصَّالِحَاتِ ۚ

 تا (کہ) بدلہ دے اُنکو، جو یقین لائے اور کئے بھلے کام۔

أُولَئِكَ لَهُمْ مَغْفِرَةٌ وَرِزْقٌ كَرِيمٌ

وہ جو ہیں، اُن کو ہے معافی اور روزی عزت کی۔

.4

وَالَّذِينَ سَعَوْا فِي آيَاتِنَا مُعَاجِزِينَ أُولَئِكَ لَهُمْ عَذَابٌ مِنْ رِجْزٍ أَلِيمٌ

 اور جو لوگ دوڑے ہماری آیتوں کے ہرانے(نیچا دکھانے) ، اُن کو بلا کی مار ہے دُکھ والی۔

.5

وَيَرَى الَّذِينَ أُوتُوا الْعِلْمَ الَّذِي أُنْزِلَ إِلَيْكَ مِنْ رَبِّكَ هُوَ الْحَقَّ

 اور دیکھ لیں جن کو ملی ہے سمجھ، کہ تجھ پر اُترا تیرے رب سے، وہی ٹھیک (حق) ہے،

وَيَهْدِي إِلَى صِرَاطِ الْعَزِيزِ الْحَمِيدِ

اور سوجھاتا ہے راہ اس زبردست خوبیوں والے کی۔

.6

وَقَالَ الَّذِينَ كَفَرُوا هَلْ نَدُلُّكُمْ عَلَى رَجُلٍ يُنَبِّئُكُمْ

 اور کہنے لگے منکر، ہم بتائیں تم کو ایک مرد، کہ تم کو خبر دیتا ہے ،

 إِذَا مُزِّقْتُمْ كُلَّ مُمَزَّقٍ إِنَّكُمْ لَفِي خَلْقٍ جَدِيدٍ

 جب تم پھٹ کر ہو جاؤ ٹکڑے ٹکڑے،تم کو پھر نیا بننا ہے(پیدا ہونا ہے نئے سرے سے) ۔

.7

أَفْتَرَى عَلَى اللَّهِ كَذِبًا أَمْ بِهِ جِنَّةٌ ۗ

 کیا بنا لایا ہے اﷲ پر جھوٹ؟

 یا اس کو سودا (دیواندگی) ہے۔

بَلِ الَّذِينَ لَا يُؤْمِنُونَ بِالْآخِرَةِ فِي الْعَذَابِ وَالضَّلَالِ الْبَعِيدِ

کوئی نہیں! جو یقین نہیں رکھتے آخرت کا آفت میں ہیں، اور صریح غلطی میں ۔

.8

 ‏أَفَلَمْ يَرَوْا إِلَى مَا بَيْنَ أَيْدِيهِمْ وَمَا خَلْفَهُمْ مِنَ السَّمَاءِ وَالْأَرْضِ ۚ

 کیا دیکھتے نہیں؟ جو کچھ ان کے آگے ہے اور پیچھے ہے، آسمان و زمین میں۔

إِنْ نَشَأْ نَخْسِفْ بِهِمُ الْأَرْضَ أَوْ نُسْقِطْ عَلَيْهِمْ كِسَفًا مِنَ السَّمَاءِ ۚ

اگر ہم چاہیں، دھنسا دیں ان کو زمین میں، یا گرا دیں اُن پر ٹکڑا آسمان سے۔

إِنَّ فِي ذَلِكَ لَآيَةً لِكُلِّ عَبْدٍ مُنِيبٍ

اس میں پتا (نشانی) ہے ہر بندے کو، جو (اﷲ کی طرف) رجوع رکھتا ہے۔

.9

وَلَقَدْ آتَيْنَا دَاوُودَ مِنَّا فَضْلًا ۖ

اور ہم نے دی داؤد کو اپنی طرف سے بڑائی۔

يَا جِبَالُ أَوِّبِي مَعَهُ وَالطَّيْرَ ۖ

اے پہاڑو! رجوع سے پڑھو اسکے ساتھ اور اڑتے جانورو!

وَأَلَنَّا لَهُ الْحَدِيدَ

اور نرم کر دیا ہم نے اس کے آگے لوہا۔

.10

أَنِ اعْمَلْ سَابِغَاتٍ وَقَدِّرْ فِي السَّرْدِ ۖ

 کہ بنا کشادہ زرہیں، اور اندازے سے جوڑ کر کڑیاں،

وَاعْمَلُوا صَالِحًا ۖ

اور کرو تم سب کام بھلا۔

إِنِّي بِمَا تَعْمَلُونَ بَصِيرٌ

میں جو کرتے ہو دیکھتا ہوں۔

.11

وَلِسُلَيْمَانَ الرِّيحَ غُدُوُّهَا شَهْرٌ وَرَوَاحُهَا شَهْرٌ ۖ

 اور سلیمان کے آگے باؤ (ہوا) ، صبح کی منزل ایک مہینے کی راہ اور شام کی منزل ایک مہینہ۔

وَأَسَلْنَا لَهُ عَيْنَ الْقِطْرِ ۖ

اور بہا دیا ہم نے اس کے واسطے چشمہ پگھلتے تانبے کا ۔

وَمِنَ الْجِنِّ مَنْ يَعْمَلُ بَيْنَ يَدَيْهِ بِإِذْنِ رَبِّهِ ۖ

اور جِنّوں میں سے کتنے لوگ جو محنت کرتے اس کے سامنے، اس کے رب کے حکم سے۔

وَمَنْ يَزِغْ مِنْهُمْ عَنْ أَمْرِنَا نُذِقْهُ مِنْ عَذَابِ السَّعِيرِ

اور جو کوئی پھرے ان میں ہمارے حکم سے چکھائیں ہم اس کو آگ کی مار۔

.12

يَعْمَلُونَ لَهُ مَا يَشَاءُ مِنْ مَحَارِيبَ وَتَمَاثِيلَ وَجِفَانٍ كَالْجَوَابِ وَقُدُورٍ رَاسِيَاتٍ ۚ

بناتے اس کے واسطے جو چاہتا قلعے اور تصویریں،اور لگن جیسے تالاب اور دیگیں چولھوں پر جمیں۔

اعْمَلُوا آلَ دَاوُودَ شُكْرًا ۚ

کام کرو داؤد کے گھر والو! حق مان کر۔

وَقَلِيلٌ مِنْ عِبَادِيَ الشَّكُورُ

اور تھوڑے ہیں میرے بندوں میں حق ماننے (شکر کرنے) والے۔

.13

فَلَمَّا قَضَيْنَا عَلَيْهِ الْمَوْتَ مَا دَلَّهُمْ عَلَى مَوْتِهِ إِلَّا دَابَّةُ الْأَرْضِ تَأْكُلُ مِنْسَأَتَهُ ۖ

پھر جب تقدیر کی ہم نے اس پر موت،نہ جتایا اُن کو اس کا مرنا مگر کیڑے نے گہن کے، کھاتا رہا اس کا عصا۔

فَلَمَّا خَرَّ تَبَيَّنَتِ الْجِنُّ

پھر جب وہ گر پڑا، معلوم کیا جِنّوں نے،

أَنْ لَوْ كَانُوا يَعْلَمُونَ الْغَيْبَ مَا لَبِثُوا فِي الْعَذَابِ الْمُهِينِ

کہ اگر خبر رکھتے ہوتے غیب کی، نہ رہتے ذلت کی تکلیف میں۔

.14

لَقَدْ كَانَ لِسَبَإٍ فِي مَسْكَنِهِمْ آيَةٌ ۖ

 قوم سبا کو تھی اُن کی بستی میں نشانی۔

جَنَّتَانِ عَنْ يَمِينٍ وَشِمَالٍ ۖ

دو باغ داہنے اور بائیں۔

كُلُوا مِنْ رِزْقِ رَبِّكُمْ وَاشْكُرُوا لَهُ ۚ

کھاؤ روزی اپنے رب کی، اور اس کا شکر کرو،

 بَلْدَةٌ طَيِّبَةٌ وَرَبٌّ غَفُورٌ

دیس ہے پاکیزہ، اور رب ہے گناہ بخشتا ۔

.15

فَأَعْرَضُوا فَأَرْسَلْنَا عَلَيْهِمْ سَيْلَ الْعَرِمِ

پھر دھیان میں نہ لائے،پھر چھوڑ دیا ہم نے اُن پر نالہ زور کا ،

وَبَدَّلْنَاهُمْ بِجَنَّتَيْهِمْ جَنَّتَيْنِ ذَوَاتَيْ أُكُلٍ خَمْطٍ وَأَثْلٍ وَشَيْءٍ مِنْ سِدْرٍ قَلِيلٍ

اور دیئے ان کو بدلے ان دو باغوں کے دو اور باغ،

جس میں کچھ ایک میوہ کسیلا اور جھاؤ، اور کچھ بیر تھوڑے سے۔

.16

ذَلِكَ جَزَيْنَاهُمْ بِمَا كَفَرُوا ۖ

یہ بدلہ دیا ہم نے ان کو اس پر کہ نا شکری کی۔

وَهَلْ نُجَازِي إِلَّا الْكَفُورَ

اور ہم (ایسا) بدلہ اسکو دیتے ہیں جو نا شکر ہو۔

.17

وَجَعَلْنَا بَيْنَهُمْ وَبَيْنَ الْقُرَى الَّتِي بَارَكْنَا فِيهَا قُرًى ظَاهِرَةً

 اور رکھی تھی ہم نے ان میں اور ان بستیوں میں جہاں ہم نے برکت رکھی ہے، بستیاں راہ پر نظر آتیں،

وَقَدَّرْنَا فِيهَا السَّيْرَ ۖ

اور منزلیں ٹھہرا دیں ہم نے ان میں چلنے کی۔

 سِيرُوا فِيهَا لَيَالِيَ وَأَيَّامًا آمِنِينَ

پھرو ان میں راتوں اور دنوں امن سے۔

.18

فَقَالُوا رَبَّنَا بَاعِدْ بَيْنَ أَسْفَارِنَا وَظَلَمُوا أَنْفُسَهُمْ

پھر کہنے لگے اے رب! فرق ڈال ہمارے سفر میں،اور اپنا بُرا کیا،

فَجَعَلْنَاهُمْ أَحَادِيثَ وَمَزَّقْنَاهُمْ كُلَّ مُمَزَّقٍ ۚ

پھر کر ڈالا ہم نے اُن کو کہانیاں اور چیر کر کر ڈالا ٹکڑے۔

إِنَّ فِي ذَلِكَ لَآيَاتٍ لِكُلِّ صَبَّارٍ شَكُورٍ

اس میں پتے (نشانیاں) ہیں ہر ٹھہرنے (صبر کرنے) والے کو، جو حق سمجھے۔

.19

وَلَقَدْ صَدَّقَ عَلَيْهِمْ إِبْلِيسُ ظَنَّهُ  فَاتَّبَعُوهُ إِلَّا فَرِيقًا مِنَ الْمُؤْمِنِينَ

 اور سچ کر دکھائی اُن پر ابلیس نے اپنی اٹکل(گمان) ،پھر اسی کی راہ چلے، مگر تھوڑے سے ایماندار۔

.20

وَمَا كَانَ لَهُ عَلَيْهِمْ مِنْ سُلْطَانٍ

 اور اُس کا ان پر کچھ زور نہ تھا،

إِلَّا لِنَعْلَمَ مَنْ يُؤْمِنُ بِالْآخِرَةِ مِمَّنْ هُوَ مِنْهَا فِي شَكٍّ ۗ

مگر اتنے واسطے تا (کہ) معلوم کریں ہم، کون یقین لاتا ہے آخرت پر، الگ اس سے جو رہتا ہے اسکی طرف سے دھوکے میں۔

وَرَبُّكَ عَلَى كُلِّ شَيْءٍ حَفِيظٌ

اور تیرا رب ہر چیز پر نگہبان ہے۔

.21

قُلِ ادْعُوا الَّذِينَ زَعَمْتُمْ مِنْ دُونِ اللَّهِ ۖ

 تُو کہہ، پکارو اُن کو جن کو دعویٰ کرتے ہو، سوا اﷲ کے۔

لَا يَمْلِكُونَ مِثْقَالَ ذَرَّةٍ فِي السَّمَاوَاتِ وَلَا فِي الْأَرْضِ

وہ نہیں مالک ایک ذرّہ بھر کے آسمانوں میں نہ زمین میں،

وَمَا لَهُمْ فِيهِمَا مِنْ شِرْكٍ وَمَا لَهُ مِنْهُمْ مِنْ ظَهِيرٍ

اور نہ اُن کا ان دونوں میں ساجھا، اور نہ ان میں کوئی اس کا مددگار۔

.22

وَلَا تَنْفَعُ الشَّفَاعَةُ عِنْدَهُ إِلَّا لِمَنْ أَذِنَ لَهُ ۚ

 اور کام نہیں آتی سفارش اسکے پاس مگر اس کو جس کے واسطے حکم دیا۔

حَتَّى إِذَا فُزِّعَ عَنْ قُلُوبِهِمْ قَالُوا مَاذَا قَالَ رَبُّكُمْ ۖ

یہاں تک کہ جب گھبراہٹ اُٹھائی جائے اُن کے دل سے، کہیں، کیا فرمایا تمہارے رب نے؟

قَالُوا الْحَقَّ ۖ

وہ کہیں، جو واجبی ہے۔

وَهُوَ الْعَلِيُّ الْكَبِيرُ

اور وہ ہے سب سے اُوپر بڑا۔

.23

قُلْ مَنْ يَرْزُقُكُمْ مِنَ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ ۖ

 تُو کہہ، کون روزی دیتا ہے تم کو آسمانوں سے اور زمین سے؟

قُلِ اللَّهُ ۖ

بتا کہ اﷲ!

وَإِنَّا أَوْ إِيَّاكُمْ لَعَلَى هُدًى أَوْ فِي ضَلَالٍ مُبِينٍ

اور یا ہم یا تم بیشک سوجھ پر ہیں، یا پڑے ہیں بہکاوے میں صریح۔

.24

قُلْ لَا تُسْأَلُونَ عَمَّا أَجْرَمْنَا وَلَا نُسْأَلُ عَمَّا تَعْمَلُونَ

 تُو کہہ، تم سے نہ پوچھیں گے جو ہم نے گناہ کیا، اور ہم سے نہ پوچھیں گے جو تم کرتے ہو۔

.25

قُلْ يَجْمَعُ بَيْنَنَا رَبُّنَا ثُمَّ يَفْتَحُ بَيْنَنَا بِالْحَقِّ

 تُو کہہ، جمع کریگا ہم سب کو رب ہمارا، پھر فیصلہ کریگا ہم میں انصاف کا۔

وَهُوَ الْفَتَّاحُ الْعَلِيمُ

اور وہی ہے نیاؤ چکانے(بہترین فیصلہ کرنے) والا سب جانتا۔

.26

قُلْ أَرُونِيَ الَّذِينَ أَلْحَقْتُمْ بِهِ شُرَكَاءَ ۖ

 تُو کہہ، مجھ کو دکھاؤ تو، جن کو اس سے ملاتے ہو ساجھی ٹھہرا کر۔

كَلَّا ۚ

کوئی (ہر گز)نہیں!

بَلْ هُوَ اللَّهُ الْعَزِيزُ الْحَكِيمُ

وہی ہے اﷲ زبردست حکمتوں والا۔

.27

وَمَا أَرْسَلْنَاكَ إِلَّا كَافَّةً لِلنَّاسِ بَشِيرًا وَنَذِيرًا  وَلَكِنَّ أَكْثَرَ النَّاسِ لَا يَعْلَمُونَ

 اور تجھ کو جو ہم نے بھیجا، سو سارے لوگوں کے واسطے خوشی اور ڈر سنانے کو،لیکن بہت لوگ نہیں سمجھتے۔

.28

وَيَقُولُونَ مَتَى هَذَا الْوَعْدُ إِنْ كُنْتُمْ صَادِقِينَ

 اور کہتے ہیں کب ہے یہ وعدہ؟

 اگر تم سچے ہو۔

.29

قُلْ لَكُمْ مِيعَادُ يَوْمٍ لَا تَسْتَأْخِرُونَ عَنْهُ سَاعَةً وَلَا تَسْتَقْدِمُونَ

 تُو کہہ، تم کو وعدہ ہے ایک دن کا، نہ دیر کرو گے اس سے ایک گھڑی، نہ شتابی (جلدی)۔

.30

وَقَالَ الَّذِينَ كَفَرُوا لَنْ نُؤْمِنَ بِهَذَا الْقُرْآنِ وَلَا بِالَّذِي بَيْنَ يَدَيْهِ ۗ

 اور کہنے لگے منکر، ہم ہر گز نہ مانیں گے یہ قرآن، اور نہ اس سے اگلا (پہلی کتابیں)۔

وَلَوْ تَرَى إِذِ الظَّالِمُونَ مَوْقُوفُونَ عِنْدَ رَبِّهِمْ يَرْجِعُ بَعْضُهُمْ إِلَى بَعْضٍ الْقَوْلَ

اور کبھی تو دیکھے، جب گنہگار کھڑے کئے گئے ہیں اپنے رب کے پاس،ایک دوسرے پر ڈالتا ہے بات۔

يَقُولُ الَّذِينَ اسْتُضْعِفُوا لِلَّذِينَ اسْتَكْبَرُوا لَوْلَا أَنْتُمْ لَكُنَّا مُؤْمِنِينَ

کہتے ہیں جن کو کمزور سمجھا تھا، بڑائی کرنے والوں کو، اگر تم نہ ہوتے تو ہم ایماندار ہوتے۔

.31

قَالَ الَّذِينَ اسْتَكْبَرُوا لِلَّذِينَ اسْتُضْعِفُوا

 کہنے لگے بڑائی کرنے والے کمزور گنے گیؤں کو،

أَنَحْنُ صَدَدْنَاكُمْ عَنِ الْهُدَى بَعْدَ إِذْ جَاءَكُمْ ۖ

کیا ہم نے روک رکھا تھا تم کو سوجھ کی بات (ہدایت) سے؟ تمہارے پاس پہنچے پیچھے،

بَلْ كُنْتُمْ مُجْرِمِينَ

کوئی نہیں! تم ہی تھے گنہگار۔

.32

وَقَالَ الَّذِينَ اسْتُضْعِفُوا لِلَّذِينَ اسْتَكْبَرُوا

 وہ کہنے لگے کمزور گنے گئے، بڑائی کرنے والوں کو،

بَلْ مَكْرُ اللَّيْلِ وَالنَّهَارِ

کوئی نہیں! پر فریب سے رات دن کے،

 إِذْ تَأْمُرُونَنَا أَنْ نَكْفُرَ بِاللَّهِ وَنَجْعَلَ لَهُ أَنْدَادًا ۚ

جب تم ہم کو حکم کرتے، کہ ہم نہ مانیں اﷲ کو اور ٹھہرائیں اسکے ساتھ برابر کے۔

 وَأَسَرُّوا النَّدَامَةَ لَمَّا رَأَوُا الْعَذَابَ  وَجَعَلْنَا الْأَغْلَالَ فِي أَعْنَاقِ الَّذِينَ كَفَرُوا ۚ

اور چھپے چھپے پچھتانے لگے، جب دیکھا عذاب ۔اور ہم نے ڈالے ہیں طوق گردنوں میں منکروں کے۔

هَلْ يُجْزَوْنَ إِلَّا مَا كَانُوا يَعْمَلُونَ

وہی بدلہ پاتے ہیں، جو کرتے تھے۔

.33

وَمَا أَرْسَلْنَا فِي قَرْيَةٍ مِنْ نَذِيرٍ إِلَّا قَالَ مُتْرَفُوهَا

 اور نہیں بھیجا ہم نے کسی بستی میں کوئی ڈرانے والا، مگر کہنے لگے ہیں وہاں کے آسودہ لوگ،

إِنَّا بِمَا أُرْسِلْتُمْ بِهِ كَافِرُونَ

ہم تمہارے ہاتھ بھیجا نہیں مانتے۔

.34

وَقَالُوا نَحْنُ أَكْثَرُ أَمْوَالًا وَأَوْلَادًا وَمَا نَحْنُ بِمُعَذَّبِينَ

 اور کہنے لگے، ہم کو زیادہ ہے مال اور اولاد، اور ہم پر آفت نہیں آنی۔

.35

قُلْ إِنَّ رَبِّي يَبْسُطُ الرِّزْقَ لِمَنْ يَشَاءُ وَيَقْدِرُ

 تُو کہہ، میرا رب ہے جو پھیلا دیتا ہے روزی جس کو چاہے، اور ماپ کر دیتا ہے (جس کو چاہے)،

وَلَكِنَّ أَكْثَرَ النَّاسِ لَا يَعْلَمُونَ

لیکن بہت لوگ سمجھ نہیں رکھتے۔

.36

وَمَا أَمْوَالُكُمْ وَلَا أَوْلَادُكُمْ بِالَّتِي تُقَرِّبُكُمْ عِنْدَنَا زُلْفَى

 اور تمہارے مال اور تمہاری اولاد، وہ نہیں کہ نزدیک کر دیں ہمارے پاس تمہارا درجہ،

 إِلَّا مَنْ آمَنَ وَعَمِلَ صَالِحًا

پر جو کوئی یقین لایا، اور بھلا کام کیا۔

فَأُولَئِكَ لَهُمْ جَزَاءُ الضِّعْفِ بِمَا عَمِلُوا وَهُمْ فِي الْغُرُفَاتِ آمِنُونَ

 سو انکو ہے بدلہ دُونا اُنکے کئے (اعمال)پر،اور وہ جھروکوں (جنت کے دریچوں)میں بیٹھے ہیں خاطر جمع (اطمینان)سے۔

.37

وَالَّذِينَ يَسْعَوْنَ فِي آيَاتِنَا مُعَاجِزِينَ أُولَئِكَ فِي الْعَذَابِ مُحْضَرُونَ

 اور جو لوگ دوڑتے ہیں ہماری آیتوں کے ہرانے (نیچا دکھانے)کو، وہ مار میں پکڑے آتے ہیں۔

.38

قُلْ إِنَّ رَبِّي يَبْسُطُ الرِّزْقَ لِمَنْ يَشَاءُ مِنْ عِبَادِهِ وَيَقْدِرُ لَهُ ۚ

 تُو کہہ، میرا رب پھیلا (کشادہ کر)دیتا ہے روزی، جسکو چاہے اپنے بندوں میں اور ماپ کر دیتا ہے اسکو(جس کو چاہے)۔

وَمَا أَنْفَقْتُمْ مِنْ شَيْءٍ فَهُوَ يُخْلِفُهُ ۖ

اور جو خرچ کرتے ہو کچھ چیز، وہ اس کا عوض دیتا ہے،

وَهُوَ خَيْرُ الرَّازِقِينَ

اور وہ بہتر ہے روزی دینے والا۔

.39

وَيَوْمَ يَحْشُرُهُمْ جَمِيعًا ثُمَّ يَقُولُ لِلْمَلَائِكَةِ

 اور جس دن جمع کریگا ان سب کو، پھر کہے گا فرشتوں کو،

أَهَؤُلَاءِ إِيَّاكُمْ كَانُوا يَعْبُدُونَ

کیا یہ لوگ تھے تم کو پُوجتے؟

.40

قَالُوا سُبْحَانَكَ أَنْتَ وَلِيُّنَا مِنْ دُونِهِمْ ۖ

 وہ بولے، پاک ذات ہے تیری، ہم تیری طرف ہیں، نہ(کہ) اُن کی طرف۔

بَلْ كَانُوا يَعْبُدُونَ الْجِنَّ ۖ  أَكْثَرُهُمْ بِهِمْ مُؤْمِنُونَ

نہیں پر (یہ)پوجتے تھے جِنّوں کو۔یہ اکثر انہی پر یقین رکھتے ہیں۔

.41

فَالْيَوْمَ لَا يَمْلِكُ بَعْضُكُمْ لِبَعْضٍ نَفْعًا وَلَا ضَرًّا

 سو آج تم مالک نہیں ایک دسرے کے بھلے کے، نہ بُرے کے،

وَنَقُولُ لِلَّذِينَ ظَلَمُوا ذُوقُوا عَذَابَ النَّارِ الَّتِي كُنْتُمْ بِهَا تُكَذِّبُونَ

اور کہیں گے ہم ان گنہگاروں کو، چکھو تکلیف اس آگ کی، جس کو تم جھوٹ بتاتے تھے ۔

.42

وَإِذَا تُتْلَى عَلَيْهِمْ آيَاتُنَا بَيِّنَاتٍ قَالُوا

 اور جب پڑھی جائیں ان پاس ہماری آیتیں کھُلی،

 مَا هَذَا إِلَّا رَجُلٌ يُرِيدُ أَنْ يَصُدَّكُمْ عَمَّا كَانَ يَعْبُدُ آبَاؤُكُمْ

کہیں اور نہیں، مگر یہ ایک مرد ہے، کہ چاہتا ہے، روک دے تم کو اُن سے جن کو پوجتے رہے تمہارے باپ دادے۔

وَقَالُوا مَا هَذَا إِلَّا إِفْكٌ مُفْتَرًى ۚ

اور کہیں، اور نہیں، یہ جھوٹ ہے باندھ لیا۔

وَقَالَ الَّذِينَ كَفَرُوا لِلْحَقِّ لَمَّا جَاءَهُمْ إِنْ هَذَا إِلَّا سِحْرٌ مُبِينٌ

اور کہتے ہیں منکر ٹھیک بات کو، جب پہنچے اُن تک، اور نہیں، یہ جادو ہے صریح۔

.43

وَمَا آتَيْنَاهُمْ مِنْ كُتُبٍ يَدْرُسُونَهَا ۖ

 اور ہم نے دی نہیں ان کو کچھ کتابیں، جن کو پڑھتے ہیں ،

وَمَا أَرْسَلْنَا إِلَيْهِمْ قَبْلَكَ مِنْ نَذِيرٍ

اور بھیجا نہیں ان پاس تجھ سے پہلے کوئی ڈرانے والا۔

.44

وَكَذَّبَ الَّذِينَ مِنْ قَبْلِهِمْ

 اور جھٹلایا ہے ان سے اگلوں نے،

 وَمَا بَلَغُوا مِعْشَارَ مَا آتَيْنَاهُمْ فَكَذَّبُوا رُسُلِي ۖ

اور یہ نہیں پہنچے دسویں حصّہ کو جو ہم نے اُن کو دیا تھا، پھر جھٹلایا میرے بھیجوں کو،

فَكَيْفَ كَانَ نَكِيرِ

تو کیسا ہوا بگاڑ (عذاب)میرا؟

.45

قُلْ إِنَّمَا أَعِظُكُمْ بِوَاحِدَةٍ ۖ

 تُو کہہ میں تو ایک ہی نصیحت کرتا ہوں تم کو،

أَنْ تَقُومُوا لِلَّهِ مَثْنَى وَفُرَادَى ثُمَّ تَتَفَكَّرُوا ۚ

کہ اُٹھ کھڑے ہو اﷲ کے کام پر دو دو اور ایک ایک،پھر دھیان کرو۔

 مَا بِصَاحِبِكُمْ مِنْ جِنَّةٍ ۚ

 اس تمہارے رفیق کو کچھ سودا (دیوانہ پن)نہیں۔

إِنْ هُوَ إِلَّا نَذِيرٌ لَكُمْ بَيْنَ يَدَيْ عَذَابٍ شَدِيدٍ

یہ تو ایک ڈرانے والا ہے تم کو، آگے آگے ایک بڑی آفت کے۔

.46

قُلْ مَا سَأَلْتُكُمْ مِنْ أَجْرٍ فَهُوَ لَكُمْ ۖ

 تُو کہہ، جو میں نے تم سے مانگا تھا کچھ نیگ (اجر)۔ سو تمہیں کو پہنچے۔

إِنْ أَجْرِيَ إِلَّا عَلَى اللَّهِ ۖ

میرا نیگ (اجر)اسی اﷲ پر،

وَهُوَ عَلَى كُلِّ شَيْءٍ شَهِيدٌ

اور اس کے سامنے ہے ہر چیز۔

.47

قُلْ إِنَّ رَبِّي يَقْذِفُ بِالْحَقِّ عَلَّامُ الْغُيُوبِ

 تُو کہہ، میرا رب پھینکتا جاتا ہے سچا دین۔ وہ جاننے والا ہے چھپی چیزیں۔

.48

قُلْ جَاءَ الْحَقُّ  وَمَا يُبْدِئُ الْبَاطِلُ وَمَا يُعِيدُ

 تُو کہہ، آیا دین سچّا۔ اور جھوٹ کو نہ پہلا وار نہ دوسرا۔

.49

قُلْ إِنْ ضَلَلْتُ فَإِنَّمَا أَضِلُّ عَلَى نَفْسِي ۖ

 تُو کہہ، اگر میں بہکا ہوں، تو یہی کہ بہکوں گا اپنے بُرے کو۔

وَإِنِ اهْتَدَيْتُ فَبِمَا يُوحِي إِلَيَّ رَبِّي ۚ

اور اگر میں سوجھا (ہدایت پر)ہوں تو اس سبب سے کہ وحی بھیجتا ہے مجھ کو میرا رب۔

إِنَّهُ سَمِيعٌ قَرِيبٌ

وہ سُنتا ہے نزدیک ۔

.50

وَلَوْ تَرَى إِذْ فَزِعُوا فَلَا فَوْتَ وَأُخِذُوا مِنْ مَكَانٍ قَرِيبٍ

 اور کبھی تُو دیکھے، جب یہ گھبرائیں گے، پھر بھاگے نہیں بچتے، اور پکڑے آئے نزدیک جگہ سے۔

.51

وَقَالُوا آمَنَّا بِهِ

 اور کہنے لگے، ہم نے اس کو یقین مانا،

 وَأَنَّى لَهُمُ التَّنَاوُشُ مِنْ مَكَانٍ بَعِيدٍ

اب کہاں ان کا ہاتھ پہنچ سکتا ہے دُور جگہ سے۔

.52

وَقَدْ كَفَرُوا بِهِ مِنْ قَبْلُ ۖ  وَيَقْذِفُونَ بِالْغَيْبِ مِنْ مَكَانٍ بَعِيدٍ

 اور اس سے منکر ہو رہے آگے (پہلے)سے۔ اور پھینکتے رہے بن دیکھے نشانے پر، دور جگہ سے۔

.53

وَحِيلَ بَيْنَهُمْ وَبَيْنَ مَا يَشْتَهُونَ كَمَا فُعِلَ بِأَشْيَاعِهِمْ مِنْ قَبْلُ ۚ

 اور اٹکاؤ (پردہ)پڑ گیا اُن میں اور جو ا ن کا جی چاہے ان میں جیسا کیا گیا ہے ان کے راہ والوں سے پہلے۔

إِنَّهُمْ كَانُوا فِي شَكٍّ مُرِيبٍ

وہ لوگ تھے دھوکے میں جو چین نہ لینے دیتا۔

*********

.54

Copy Rights:

Zahid Javed Rana, Abid Javed Rana, Lahore, Pakistan

Visits wef 2016

AmazingCounters.com