القرآن الحکیم (اردو ترجمہ)

حضرت شاہ عبدالقادر

سورۃ الملک

Previous           Index           Next

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ

 

تَبَـٰرَكَ ٱلَّذِى بِيَدِهِ ٱلۡمُلۡكُ وَهُوَ عَلَىٰ كُلِّ شَىۡءٍ۬ قَدِيرٌ 

بڑی برکت ہے اس کی (ذات) جس کے ہاتھ میں ہے راج (بادشاہی) اور وہ سب چیز کر سکتا (پر قادر)ہے۔

.1

ٱلَّذِى خَلَقَ ٱلۡمَوۡتَ وَٱلۡحَيَوٰةَ لِيَبۡلُوَكُمۡ أَيُّكُمۡ أَحۡسَنُ عَمَلاً۬‌ۚ

جس نے بنایا مرنا اور جینا کہ تم کو جانچے (آزمائے) ، کون تم میں اچھا کرتا ہے کام۔

وَهُوَ ٱلۡعَزِيزُ ٱلۡغَفُورُ 

اور وہ زبردست ہے بخشنے والا۔

.2

ٱلَّذِى خَلَقَ سَبۡعَ سَمَـٰوَٲتٍ۬ طِبَاقً۬ا‌ۖ

جس نے بنائے سات آسمان تہہ بر تہہ۔

مَّا تَرَىٰ فِى خَلۡقِ ٱلرَّحۡمَـٰنِ مِن تَفَـٰوُتٍ۬‌ۖ

کیا دیکھتا ہے رحمٰن کے بنائے میں کچھ فرق؟

فَٱرۡجِعِ ٱلۡبَصَرَ هَلۡ تَرَىٰ مِن فُطُورٍ۬ 

پھر دُہرا کر نگاہ کر کہیں دیکھتا ہے دراڑ،

.3

ثُمَّ ٱرۡجِعِ ٱلۡبَصَرَ كَرَّتَيۡنِ يَنقَلِبۡ إِلَيۡكَ ٱلۡبَصَرُ خَاسِئً۬ا وَهُوَ حَسِيرٌ۬ 

پھر دہرا کر نگاہ کر، دو دو بار اُلٹی آئے تیرے پاس تیری نگاہ رد ہو کر تھک کر۔

.4

وَلَقَدۡ زَيَّنَّا ٱلسَّمَآءَ ٱلدُّنۡيَا بِمَصَـٰبِيحَ وَجَعَلۡنَـٰهَا رُجُومً۬ا لِّلشَّيَـٰطِينِ‌ۖ

اور ہم نے رونق دی ورلے (قریبی) آسمان کو چراغوں سے اور ان سے رکھی پھینک مار شیطانوں کی،

وَأَعۡتَدۡنَا لَهُمۡ عَذَابَ ٱلسَّعِيرِ 

اور رکھی ہے ان کو مار دہکتی آگ کی۔

.5

وَلِلَّذِينَ كَفَرُواْ بِرَبِّہِمۡ عَذَابُ جَهَنَّمَ‌ۖ

اور جو منکر ہوئے اپنے رب سے ، ان کو ہے مار (عذاب)دوزخ کی۔

وَبِئۡسَ ٱلۡمَصِيرُ   

 اور بُری جگہ پہنچے۔

.6

إِذَآ أُلۡقُواْ فِيہَا سَمِعُواْ لَهَا شَہِيقً۬ا وَهِىَ تَفُورُ 

جب اس میں ڈالے جائیں سُنیں اس کا دھاڑنا، اور وہ اچھلتی (جوش کھا رہی) ہے،

.7

تَكَادُ تَمَيَّزُ مِنَ ٱلۡغَيۡظِ‌ۖ

 ابھی لگتا ہے کہ پھٹ پڑے جوش سے۔

كُلَّمَآ أُلۡقِىَ فِيہَا فَوۡجٌ۬ سَأَلَهُمۡ خَزَنَتُہَآ أَلَمۡ يَأۡتِكُمۡ نَذِيرٌ۬ 

جس بار پڑا اس میں ایک دَل (گروہ)، پوچھا ان سےاس کے داروغوں نے،کیا نہ پہنچا تم کو کوئی ڈر سنانے والا۔

.8

قَالُواْ بَلَىٰ قَدۡ جَآءَنَا نَذِيرٌ۬ فَكَذَّبۡنَا

وہ بولے کیوں نہیں ہم پاس پہنچا تھا ڈر سنانے والا۔ پھر ہم نے (اسے)جھٹلایا،

وَقُلۡنَا مَا نَزَّلَ ٱللَّهُ مِن شَىۡءٍ إِنۡ أَنتُمۡ إِلَّا فِى ضَلَـٰلٍ۬ كَبِيرٍ۬ 

اور کہا کوئی نہیں اتاری اﷲ نے کچھ چیز۔ تم پڑے ہو بڑے بہکاوے (گمراہی) میں۔

.9

وَقَالُواْ لَوۡ كُنَّا نَسۡمَعُ أَوۡ نَعۡقِلُ مَا كُنَّا فِىٓ أَصۡحَـٰبِ ٱلسَّعِيرِ 

اور بولے، اگر ہم ہوتے سنتے یا بوجھتے، نہ ہوتے دوزخ والوں میں۔

.10

فَٱعۡتَرَفُواْ بِذَنۢبِہِمۡ فَسُحۡقً۬ا لِّأَصۡحَـٰبِ ٱلسَّعِيرِ 

سو قائل ہوئے اپنے گناہ کے۔ اب دفع ہوں دوزخ والے۔

.11

إِنَّ ٱلَّذِينَ يَخۡشَوۡنَ رَبَّهُم بِٱلۡغَيۡبِ لَهُم مَّغۡفِرَةٌ۬ وَأَجۡرٌ۬ كَبِيرٌ۬ 

جو لوگ ڈرتے ہیں اپنے رب سے بن دیکھے ان کو معافی ہے اور نیگ (اجر) بڑا۔

.12

وَأَسِرُّواْ قَوۡلَكُمۡ أَوِ ٱجۡهَرُواْ بِهِۦۤ‌ۖ إِنَّهُ ۥ عَلِيمُۢ بِذَاتِ ٱلصُّدُورِ 

 اور تم چھپی کہو اپنی بات یا کھول کر۔  وہ جانتا ہے جیوں (دلوں) کے بھید۔

.13

أَلَا يَعۡلَمُ مَنۡ خَلَقَ

بھلا وہ (ہی) نہ جانے جس نے بنایا؟

وَهُوَ ٱللَّطِيفُ ٱلۡخَبِيرُ   

اور وہی ہے بھید جانتا خبردار۔

.14

هُوَ ٱلَّذِى جَعَلَ لَكُمُ ٱلۡأَرۡضَ ذَلُولاً۬ فَٱمۡشُواْ فِى مَنَاكِبِہَا وَكُلُواْ مِن رِّزۡقِهِۦ‌ۖ

وہی (تو) ہے جس نے کیا تمہارے آگے زمین کو پست،

 اب پھرو اسکے کندھوں پراور کھاؤ کچھ روزی دی اس (اﷲ) کی۔

وَإِلَيۡهِ ٱلنُّشُورُ 

 اور اسی کی طرف جی (دوبارہ) اٹھنا ہے۔

.15

ءَأَمِنتُم مَّن فِى ٱلسَّمَآءِ أَن يَخۡسِفَ بِكُمُ ٱلۡأَرۡضَ فَإِذَا هِىَ تَمُورُ 

کیا نڈر (بے خوف) ہوئے اس سے ، جو آسمان میں ہےکہ دھنسا دے تم کو زمین میں، پھر دیکھو وہ لرزتی ہے؟

.16

أَمۡ أَمِنتُم مَّن فِى ٱلسَّمَآءِ أَن يُرۡسِلَ عَلَيۡكُمۡ حَاصِبً۬ا‌ۖ

یا نڈر (بے خوف) ہوئے ہو اس سے جو آسمان میں ہے کہ چھوڑ دے تم پر پھتراؤ باؤ (ہوا) کا؟

فَسَتَعۡلَمُونَ كَيۡفَ نَذِيرِ   

سو اب جانو گے، کیسا ہے میرا دڑکا (تنبیہ)!

.17

وَلَقَدۡ كَذَّبَ ٱلَّذِينَ مِن قَبۡلِهِمۡ فَكَيۡفَ كَانَ نَكِيرِ 

 اور جھٹلا چکے ہیں جو ان سے پہلے تھے، پھر کیسا ہوا میرا بگاڑ (عذاب)؟

.18

أَوَلَمۡ يَرَوۡاْ إِلَى ٱلطَّيۡرِ فَوۡقَهُمۡ صَـٰٓفَّـٰتٍ۬ وَيَقۡبِضۡنَ‌ۚ

 اور کیا نہیں دیکھے اڑتے جانور اپنے اوپر پر کھولے اور جھپکتے؟

مَا يُمۡسِكُهُنَّ إِلَّا ٱلرَّحۡمَـٰنُ‌ۚ

 ان کو کوئی نہیں تھام رہا، رحمٰن کے سوا۔

إِنَّهُ ۥ بِكُلِّ شَىۡءِۭ بَصِيرٌ   

اس کی نگاہ میں ہے ہر چیز۔

.19

أَمَّنۡ هَـٰذَا ٱلَّذِى هُوَ جُندٌ۬ لَّكُمۡ يَنصُرُكُم مِّن دُونِ ٱلرَّحۡمَـٰنِ‌ۚ

بھلا وہ کون ہے جو فوج ہے تمہاری مدد کرے گی تمہاری رحمٰن کے سوا؟

إِنِ ٱلۡكَـٰفِرُونَ إِلَّا فِى غُرُورٍ 

منکر پڑے ہیں نرے بہکاوے میں۔

.20

أَمَّنۡ هَـٰذَا ٱلَّذِى يَرۡزُقُكُمۡ إِنۡ أَمۡسَكَ رِزۡقَهُ ۥ‌ۚ

بھلا وہ کون ہے جو روزی دیگا تم کو، اگر وہ (رحمٰن) رکھ چھوڑے اپنی روزی؟

بَل لَّجُّواْ فِى عُتُوٍّ۬ وَنُفُورٍ   

کوئی نہیں! پر اڑ رہے ہیں شرارت اور بدکنے پر،

.21

أَفَمَن يَمۡشِى مُكِبًّا عَلَىٰ وَجۡهِهِۦۤ أَهۡدَىٰٓ أَمَّن يَمۡشِى سَوِيًّا عَلَىٰ صِرَٲطٍ۬ مُّسۡتَقِيمٍ۬  

بھلا ایک جو چلے اوندھا اپنے منہ پر، وہ سیدھی راہ پائے یا وہ جو چلے سیدھا ایک سیدھی راہ پر؟

.22

قُلۡ هُوَ ٱلَّذِىٓ أَنشَأَكُمۡ وَجَعَلَ لَكُمُ ٱلسَّمۡعَ وَٱلۡأَبۡصَـٰرَ وَٱلۡأَفۡـِٔدَةَ‌ۖ

تو کہہ، وہی ہے جس نے تم کو نکال کھڑا (پیدا) کیا، اور بنا دیئے تم کو کان اور آنکھیں اور دل۔

قَلِيلاً۬ مَّا تَشۡكُرُونَ   

تم تھوڑا حق مانتے (شکر گزار ہوتے) ہو۔

.23

قُلۡ هُوَ ٱلَّذِى ذَرَأَكُمۡ فِى ٱلۡأَرۡضِ وَإِلَيۡهِ تُحۡشَرُونَ 

تو کہہ وہی ہے جس نے کھنڈایا (پھیلایا) تم کو زمین میں، اور اسی کی طرف اکٹھے کئے جاؤگے۔

.24

وَيَقُولُونَ مَتَىٰ هَـٰذَا ٱلۡوَعۡدُ إِن كُنتُمۡ صَـٰدِقِينَ 

اور کہتے ہیں کب ہے یہ وعدہ اگر تم سچے ہو؟

.25

قُلۡ إِنَّمَا ٱلۡعِلۡمُ عِندَ ٱللَّهِ وَإِنَّمَآ أَنَا۟ نَذِيرٌ۬ مُّبِينٌ۬ 

تو کہہ، خبر تو ہے اﷲ ہی پاس۔ اور میں تو یہی ڈر سنانے والا ہوں کھول کر۔

.26

فَلَمَّا رَأَوۡهُ زُلۡفَةً۬ سِيٓـَٔتۡ وُجُوهُ ٱلَّذِينَ كَفَرُواْوَقِيلَ هَـٰذَا ٱلَّذِى كُنتُم بِهِۦ تَدَّعُونَ 

پھر جب دیکھیں گے وہ پاس آ لگا، بُرے بن جائیں گے منہ منکروں کے اور کہے گایہی ہے جس کو تم مانگتے تھے۔

.27

قُلۡ أَرَءَيۡتُمۡ إِنۡ أَهۡلَكَنِىَ ٱللَّهُ وَمَن مَّعِىَ أَوۡ رَحِمَنَا

تو کہہ، بھلا دیکھو تو!اگر کھپا (ہلاک کر) دے مجھ کو اﷲ، اور میرے ساتھ والوں کو، یا ہم پر مہر (رحم) کرے،

فَمَن يُجِيرُ ٱلۡكَـٰفِرِينَ مِنۡ عَذَابٍ أَلِيمٍ۬   

پھر کون ہے جو بچائے منکروں کو دُکھ کی مار سے؟

.28

قُلۡ هُوَ ٱلرَّحۡمَـٰنُ ءَامَنَّا بِهِۦ وَعَلَيۡهِ تَوَكَّلۡنَا‌ۖ

تو کہہ وہی رحمٰن ہے، ہم نے اس کو مانا اور اسی پر بھروسہ کیا۔

فَسَتَعۡلَمُونَ مَنۡ هُوَ فِى ضَلَـٰلٍ۬ مُّبِينٍ۬   

سو اب جان لو گے، کون پڑا ہے صریح بہکاوے (گمراہی) میں؟

.29

قُلۡ أَرَءَيۡتُمۡ إِنۡ أَصۡبَحَ مَآؤُكُمۡ غَوۡرً۬ا فَمَن يَأۡتِيكُم بِمَآءٍ۬ مَّعِينِۭ 

 تو کہہ، بھلا دیکھو تو! اگر ہو رہے صبح کو پانی تمہارا خشک پھر کون ہے جو لائے تم کو پانی نتھرا (صاف)؟

*********

.30

Copy Rights:

Zahid Javed Rana, Abid Javed Rana, Lahore, Pakistan

Visits wef 2016

AmazingCounters.com