القرآن الحکیم (اردو ترجمہ)

حضرت شاہ عبدالقادر

سورۃ المرسلات

Previous           Index           Next

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ

 

وَٱلۡمُرۡسَلَـٰتِ عُرۡفً۬ا 

قسم ہے چلتی باؤں (ہواؤں) کی، دل کو خوش آتی،

.1

فَٱلۡعَـٰصِفَـٰتِ عَصۡفً۬ا 

 پھر جھونکا دینے والیاں زور سے(طوفانی)،

.2

وَٱلنَّـٰشِرَٲتِ نَشۡرً۬ا 

پھر ابھارنے والیاں اٹھا کر(بادلوں کو)،

.3

فَٱلۡفَـٰرِقَـٰتِ فَرۡقً۬ا 

پھر پھاڑنے والیاں بانٹ کر،

.4

فَٱلۡمُلۡقِيَـٰتِ ذِكۡرًا 

پھر فرشتے اُتارنے والوں کی سمجھوتی(نصیحت)،

.5

عُذۡرًا أَوۡ نُذۡرًا 

الزام اتارنے(توبہ کے لئے) کو، یا ڈر سنانے کو۔

.6

إِنَّمَا تُوعَدُونَ لَوَٲقِعٌ۬ 

مقرر (یاد رکھو) جو تم سے وعدہ ہوا سو ہونا ہے۔

.7

فَإِذَا ٱلنُّجُومُ طُمِسَتۡ 

پھر جب تارے مٹائے جائیں (ماند پڑ جائیں)،

.8

وَإِذَا ٱلسَّمَآءُ فُرِجَتۡ 

اور جب آسمان میں جھروکے پڑیں(پھاڑ دیا جائے)،

.9

وَإِذَا ٱلۡجِبَالُ نُسِفَتۡ 

اور جب پہاڑ اُڑائے جائیں،

.10

وَإِذَا ٱلرُّسُلُ أُقِّتَتۡ 

اور جب رسولوں کا وعدہ ٹھہرے۔

.11

لِأَىِّ يَوۡمٍ أُجِّلَتۡ 

   کس دن کی ان کو دیر ہے؟

.12

لِيَوۡمِ ٱلۡفَصۡلِ 

اس فیصلہ کے دن کی،

.13

وَمَآ أَدۡرَٮٰكَ مَا يَوۡمُ ٱلۡفَصۡلِ 

اور تو کیا بوجھا  کیا ہے (کیسا ہو گا) فیصلہ کا دن؟

.14

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.15

أَلَمۡ نُہۡلِكِ ٱلۡأَوَّلِينَ 

 کیا ہم کھپا (ہلاک) نہیں چکے اگلے (پہلے)؟

.16

ثُمَّ نُتۡبِعُهُمُ ٱلۡأَخِرِينَ 

پھر ان کے پیچھے بھیجتے ہیں پچھلے (بعد والوں کو)۔

.17

كَذَٲلِكَ نَفۡعَلُ بِٱلۡمُجۡرِمِينَ 

ہم یہی کچھ کیا کرتے ہیں گنہگاروں سے۔

.18

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.19

أَلَمۡ نَخۡلُقكُّم مِّن مَّآءٍ۬ مَّهِينٍ۬ 

کیا ہم نے نہیں بنایا تم کو ایک بے قدر پانی سے؟

.20

فَجَعَلۡنَـٰهُ فِى قَرَارٍ۬ مَّكِينٍ 

پھر رکھا اس کو ایک جمے ٹھہراؤ (محفوظ جگہ) میں،

.21

إِلَىٰ قَدَرٍ۬ مَّعۡلُومٍ۬ 

ایک وعدہ (مدت) مقرر تک،

.22

فَقَدَرۡنَا فَنِعۡمَ ٱلۡقَـٰدِرُونَ 

پھر ہم کر سکے، سو کیا خوب سکت (طاقت) والے ہیں۔

.23

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.24

أَلَمۡ نَجۡعَلِ ٱلۡأَرۡضَ كِفَاتًا 

   کیا ہم نے نہیں بنائی زمین سمیٹنے والی،

.25

أَحۡيَآءً۬ وَأَمۡوَٲتً۬ا 

جیتوں (زندوں) کو اور مُردوں کو،

.26

وَجَعَلۡنَا فِيہَا رَوَٲسِىَ شَـٰمِخَـٰتٍ۬

اور رکھے اس میں بوجھ کو پہاڑ اونچے،

وَأَسۡقَيۡنَـٰكُم مَّآءً۬ فُرَاتً۬ا 

اور پلایا تم کو پانی میٹھا پیاس بجھاتا۔

.27

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.28

ٱنطَلِقُوٓاْ إِلَىٰ مَا كُنتُم بِهِۦ تُكَذِّبُونَ 

چلو دیکھو! جو چیز تم لوگ جھٹلاتے تھے،

.29

ٱنطَلِقُوٓاْ إِلَىٰ ظِلٍّ۬ ذِى ثَلَـٰثِ شُعَبٍ۬ 

چلو ایک چھاؤں میں، جس کی تین پھانکیں(شاخیں)،

.30

لَّا ظَلِيلٍ۬ وَلَا يُغۡنِى مِنَ ٱللَّهَبِ 

نہ گھن (سایہ، کشادگی)کی اور نہ کام آئے تپش میں۔

.31

إِنَّہَا تَرۡمِى بِشَرَرٍ۬ كَٱلۡقَصۡرِ 

وہ آگ پھینکتی ہے چنگاریاں جیسے محل (کے برابربڑی)،

.32

كَأَنَّهُ ۥ جِمَـٰلَتٌ۬ صُفۡرٌ۬ 

جیسے وہ اُونٹ ہیں زرد (رنگ کے)۔

.33

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.34

هَـٰذَا يَوۡمُ لَا يَنطِقُونَ 

یہ وہ دن ہے، کہ نہ بولیں گے،

.35

وَلَا يُؤۡذَنُ لَهُمۡ فَيَعۡتَذِرُونَ 

اور نہ ان کو حکم ہو کہ توبہ(عذر پیش) کریں۔

.36

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.37

هَـٰذَا يَوۡمُ ٱلۡفَصۡلِ‌ۖ

یہ ہے دن فیصلے کا،

جَمَعۡنَـٰكُمۡ وَٱلۡأَوَّلِينَ 

جمع کیا ہم نے تم کو اور اگلوں (پہلوں) کو،

.38

فَإِن كَانَ لَكُمۡ كَيۡدٌ۬ فَكِيدُونِ 

 پھر اگر کچھ داؤ ہے تمہارا، تو چلا لو مجھ پر۔

.39

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.40

إِنَّ ٱلۡمُتَّقِينَ فِى ظِلَـٰلٍ۬ وَعُيُونٍ۬ 

جو ڈر والے (متقی) ہیں، وہ چھاؤں میں ہیں اور ندیوں میں،

.41

وَفَوَٲكِهَ مِمَّا يَشۡتَہُونَ 

اور میوے (ہوں گے) جس قسم کے (انکے) جی (دل) چاہے،

.42

كُلُواْ وَٱشۡرَبُواْ هَنِيٓـَٔۢا بِمَا كُنتُمۡ تَعۡمَلُونَ 

   کھاؤ اور پیؤ رچ (مزے) سے، بدلہ اس کا جو کرتے تھے۔

.43

إِنَّا كَذَٲلِكَ نَجۡزِى ٱلۡمُحۡسِنِينَ 

ہم یونہی دیتے ہیں بدلہ نیکی والوں کو۔

.44

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.45

كُلُواْ وَتَمَتَّعُواْ قَلِيلاً إِنَّكُم مُّجۡرِمُونَ 

 کھا لو اور برت (مزہ لے) لو تھوڑے دنوں تم مقرر (یقیناً) گنہگار ہو۔

.46

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.47

وَإِذَا قِيلَ لَهُمُ ٱرۡكَعُواْ لَا يَرۡكَعُونَ 

اور جب کہئے ان کو، نِوو(جھکو اﷲ کے آگے) ، نہیں نِوتے (جھکتے)۔

.48

وَيۡلٌ۬ يَوۡمَٮِٕذٍ۬ لِّلۡمُكَذِّبِينَ 

خرابی ہے اس دن جھٹلانے والوں کی۔

.49

فَبِأَىِّ حَدِيثِۭ بَعۡدَهُ ۥ يُؤۡمِنُونَ 

اب کس بات (کلام) پر اس کے بعد یقین لائیں گے؟

*********

.50

Copy Rights:

Zahid Javed Rana, Abid Javed Rana, Lahore, Pakistan

Visits wef 2016

AmazingCounters.com