القرآن الحکیم (اردو ترجمہ)

حضرت شاہ عبدالقادر

سورۃ الفتح

Previous           Index           Next

بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ

 

إِنَّا فَتَحْنَا لَكَ فَتْحًا مُبِينًا

 ہم نے فیصلہ کر دیا تیرے واسطے ، صریح (صاف) فیصلہ(فتح) ۔

.1

لِيَغْفِرَ لَكَ اللَّهُ مَا تَقَدَّمَ مِنْ ذَنْبِكَ وَمَا تَأَخَّرَ

تا (کہ) معاف کرے تجھ کو اﷲ جو آگے ہوئے تیرے گناہ اور جو پیچھے رہے،

وَيُتِمَّ نِعْمَتَهُ عَلَيْكَ وَيَهْدِيَكَ صِرَاطًا مُسْتَقِيمًا

اور پُورا کرے تجھ پر اپنا احسان اور چلائے تجھ کو سیدھی راہ۔

.2

وَيَنْصُرَكَ اللَّهُ نَصْرًا عَزِيزًا

اور مدد کرے تجھ کو اﷲ زبردست مدد۔

.3

هُوَ الَّذِي أَنْزَلَ السَّكِينَةَ فِي قُلُوبِ الْمُؤْمِنِينَ لِيَزْدَادُوا إِيمَانًا مَعَ إِيمَانِهِمْ ۗ

وہی ہے جس نے اتارا چین دل میں ایمان والوں کے، کہ اور بڑھے ان کو ایمان اپنے ایمان کے ساتھ۔

وَلِلَّهِ جُنُودُ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ ۚ

اور اﷲ کو ہیں لشکر آسمانوں کے اور زمین کے۔

وَكَانَ اللَّهُ عَلِيمًا حَكِيمًا

اور اﷲ ہے خبردار حکمت والا۔

.4

لِيُدْخِلَ الْمُؤْمِنِينَ وَالْمُؤْمِنَاتِ جَنَّاتٍ تَجْرِي مِنْ تَحْتِهَا الْأَنْهَارُ خَالِدِينَ فِيهَا

تا (کہ) پہنچائے ایمان والے مردوں کو اور عورتوں کو باغوں میں، نیچے بہتی ہیں انکے نہریں،سدا رہیں ان میں،

وَيُكَفِّرَ عَنْهُمْ سَيِّئَاتِهِمْ ۚ

اور اتارے(دور کرے) ان سے ان کی برائیاں۔

وَكَانَ ذَلِكَ عِنْدَ اللَّهِ فَوْزًا عَظِيمًا

اور یہ ہے اﷲ کے ہاں بڑی مراد (کامیابی) ملنی۔

.5

وَيُعَذِّبَ الْمُنَافِقِينَ وَالْمُنَافِقَاتِ وَالْمُشْرِكِينَ وَالْمُشْرِكَاتِ الظَّانِّينَ بِاللَّهِ ظَنَّ السَّوْءِ ۚ

اور تا (کہ) عذاب کرے دغاباز مردوں کو اور عورتوں کو، اور شرک والے مردوں کو اور عورتوں کو،

جو اٹکلتے (گمان کرتے) ہیں اﷲ پر بری اٹکلیں(گمان) ،

 عَلَيْهِمْ دَائِرَةُ السَّوْءِ ۖ

انہیں پر پڑے پھیر مصیبت کا۔

وَغَضِبَ اللَّهُ عَلَيْهِمْ وَلَعَنَهُمْ وَأَعَدَّ لَهُمْ جَهَنَّمَ ۖ

اور غصے ہوا اﷲ ان پر، اور ان کو پھٹکارا، اور رکھا ان کے واسطے دوزخ۔

وَسَاءَتْ مَصِيرًا

اور (وہ) بری جگہ پہنچے۔

.6

وَلِلَّهِ جُنُودُ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ ۚ

اور اﷲ کے ہیں لشکر آسمانوں کے اور زمین کے۔

وَكَانَ اللَّهُ عَزِيزًا حَكِيمًا

اور ہے اﷲ زبردست حکمت والا۔

.7

إِنَّا أَرْسَلْنَاكَ شَاهِدًا وَمُبَشِّرًا وَنَذِيرًا

 ہم نے (اے محمدؐ) تجھ کو بھیجا احوال بتانے والا، اور خوشی اور ڈر سناتا۔

.8

لِتُؤْمِنُوا بِاللَّهِ وَرَسُولِهِ وَتُعَزِّرُوهُ وَتُوَقِّرُوهُ

تا (کہ) تم لوگ یقین لاؤ اﷲ پر اور اس کے رسول پر، اور اسکی مدد کرو اور اسکا ادب رکھو۔

وَتُسَبِّحُوهُ بُكْرَةً وَأَصِيلًا

اور اسکی پاکی بولو صبح اور شام ۔

.9

إِنَّ الَّذِينَ يُبَايِعُونَكَ إِنَّمَا يُبَايِعُونَ اللَّهَ يَدُ اللَّهِ فَوْقَ أَيْدِيهِمْ ۚ

اور جو لوگ ہاتھ ملاتے (بیعت کرتے) ہیں تجھ سے، وہ ہاتھ ملاتے (بیعت کرتے) ہیں اﷲ سے۔

اﷲ کا ہاتھ ہے اوپر ان کے ہاتھ کے۔

فَمَنْ نَكَثَ فَإِنَّمَا يَنْكُثُ عَلَى نَفْسِهِ ۖ

پھرجو کوئی قول توڑے، سو توڑتا ہے اپنے برے کو۔

وَمَنْ أَوْفَى بِمَا عَاهَدَ عَلَيْهُ اللَّهَ فَسَيُؤْتِيهِ أَجْرًا عَظِيمًا

اور جو کوئی پورا کرے جس پر اقرار کیا اﷲ سے، دے گا اس کو نیگ (اجر) بڑا۔

.10

سَيَقُولُ لَكَ الْمُخَلَّفُونَ مِنَ الْأَعْرَابِ شَغَلَتْنَا أَمْوَالُنَا وَأَهْلُونَا فَاسْتَغْفِرْ لَنَا ۚ

اب کہیں گے تجھ کو پیچھے رہنے والے گنوار ہم لگے رہ گئے اپنے مالوں میں اور گھروں میں ، سو ہمارا گناہ بخشوا

يَقُولُونَ بِأَلْسِنَتِهِمْ مَا لَيْسَ فِي قُلُوبِهِمْ ۚ

کہتے ہیں اپنی زبان سے، جو نہیں ان کے دل میں۔

قُلْ فَمَنْ يَمْلِكُ لَكُمْ مِنَ اللَّهِ شَيْئًا إِنْ أَرَادَ بِكُمْ ضَرًّا أَوْ أَرَادَ بِكُمْ نَفْعًا ۚ

تو کہہ، کس کا کچھ چلتا ہے (زور) اﷲ سے تمہارے واسطے اگر وہ چاہے تم پر تکلیف یا چاہے تم کو فائدہ؟

بَلْ كَانَ اللَّهُ بِمَا تَعْمَلُونَ خَبِيرًا

بلکہ اﷲ ہے تمہارے کام سے خبردار۔

.11

بَلْ ظَنَنْتُمْ أَنْ لَنْ يَنْقَلِبَ الرَّسُولُ وَالْمُؤْمِنُونَ إِلَى أَهْلِيهِمْ أَبَدًا

کوئی (ہرگز) نہیں! تم نے خیال کیا، کہ پھر کر نہ آئے گا رسول اور مسلمان اپنے گھر کبھی،

وَ زُيِّنَ ذَلِكَ فِي قُلُوبِكُمْ وَظَنَنْتُمْ ظَنَّ السَّوْءِ وَكُنْتُمْ قَوْمًا بُورًا

اور بھلا نظر آیا تمہارے دل میں یہ ،اور اٹکل (گمان) کی تم نے بُری اٹکلیں(گمان)

اورتم لوگ تھے کھپنے (ہر حال میں ہلاک ہونے) والے۔

.12

وَمَنْ لَمْ يُؤْمِنْ بِاللَّهِ وَرَسُولِهِ فَإِنَّا أَعْتَدْنَا لِلْكَافِرِينَ سَعِيرًا

اور جو کوئی یقین نہ لائے اﷲ پر اور اسکے رسول پر تو ہم نے رکھی ہے منکروں کے واسطے دہکتی آگ۔

.13

وَلِلَّهِ مُلْكُ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ ۚ

اور اﷲ کا ہے راج آسمانوں کا اور زمین کا۔

يَغْفِرُ لِمَنْ يَشَاءُ وَيُعَذِّبُ مَنْ يَشَاءُ ۚ

بخشے جس کو چاہے، اور مار (عذاب)دے جس کو چاہے۔

وَكَانَ اللَّهُ غَفُورًا رَحِيمًا

اور ہے اﷲ بخشنے والامہربان۔

.14

سَيَقُولُ الْمُخَلَّفُونَ إِذَا انْطَلَقْتُمْ إِلَى مَغَانِمَ لِتَأْخُذُوهَا ذَرُونَا نَتَّبِعْكُمْ ۖ

اب کہیں گے پیچھے رہ گئے (رہ جانے والے) جب چلو گےغنیمتیں لینے کو چھوڑو(اجازت دو) ہم چلیں تمہارے ساتھ۔

يُرِيدُونَ أَنْ يُبَدِّلُوا كَلَامَ اللَّهِ ۚ

چاہتے ہیں کہ بدلیں اﷲ کا کہا (قول)۔

قُلْ لَنْ تَتَّبِعُونَا كَذَلِكُمْ قَالَ اللَّهُ مِنْ قَبْلُ ۖ

تو کہہ ہمارے ساتھ نہ چلو گے، یونہی کہہ(فرما) دیا اﷲ نے پہلے سے۔

فَسَيَقُولُونَ بَلْ تَحْسُدُونَنَا ۚ

پھر اب کہیں گے، نہیں تم جلتے (حسد کرتے)ہو ہمارے بھلے سے۔

بَلْ كَانُوا لَا يَفْقَهُونَ إِلَّا قَلِيلًا

کوئی (ہرگز) نہیں! پر وہ سمجھتے نہیں رہے مگر تھوڑا۔

.15

قُلْ  لِلْمُخَلَّفِينَ مِنَ الْأَعْرَابِ سَتُدْعَوْنَ إِلَى قَوْمٍ أُولِي بَأْسٍ شَدِيدٍ تُقَاتِلُونَهُمْ أَوْ يُسْلِمُونَ ۖ

کہہ دے پیچھے رہ گئے گنواروں کو، آگے(عنقریب) تم کو بلائیں گے ایک لوگوں پر،بڑے سخت لڑ دیے(زورآور) ،

 تم ان سے لڑو گے، یا وہ مسلمان ہوں گے۔

فَإِنْ تُطِيعُوا يُؤْتِكُمُ اللَّهُ أَجْرًا حَسَنًا ۖ

پھر اگر حکم مانو گے، دے گا تم کو اﷲ نیگ (اجر) اچھا۔

وَإِنْ تَتَوَلَّوْا كَمَا تَوَلَّيْتُمْ مِنْ قَبْلُ يُعَذِّبْكُمْ عَذَابًا أَلِيمًا

اور اگر پلٹ جاؤ گے جیسے پلٹ گئے پہلی بار، مار(عذاب)  دے تم کو ایک دکھ کی مار(عذاب) ۔

.16

لَيْسَ عَلَى الْأَعْمَى حَرَجٌ وَلَا عَلَى الْأَعْرَجِ حَرَجٌ وَلَا عَلَى الْمَرِيضِ حَرَجٌ ۗ

اندھے پر تکلیف نہیں (کہ نہ شریک ہوں جنگ میں)اور نہ لنگڑے پر تکلیف(حرج) ،اور نہ بیمار پر تکلیف۔

وَمَنْ يُطِعِ اللَّهَ وَرَسُولَهُ يُدْخِلْهُ جَنَّاتٍ تَجْرِي مِنْ تَحْتِهَا الْأَنْهَارُ ۖ

اور جو کوئی حکم مانے اﷲ کا اور اس کے رسول کا اس کو داخل کرے گا باغوں میں، جن کے نیچے بہتی ندیاں۔

وَمَنْ يَتَوَلَّ يُعَذِّبْهُ عَذَابًا أَلِيمًا

اور جو کوئی پلٹ جائے، اس کو مار دکھ کی مار(عذاب) ۔

.17

لَقَدْ رَضِيَ اللَّهُ عَنِ الْمُؤْمِنِينَ إِذْ يُبَايِعُونَكَ تَحْتَ الشَّجَرَةِ

اﷲ خوش ہوا ایمان والوں سے، جب ہاتھ ملانے (بیعت کرنے) لگے تجھ سے اُس درخت کے نیچے،

فَعَلِمَ مَا فِي قُلُوبِهِمْ فَأَنْزَلَ السَّكِينَةَ عَلَيْهِمْ

پھر (اﷲ نے) جانا جو ان کے جی میں تھا، پھر اُتارا ان پر چین،

وَأَثَابَهُمْ فَتْحًا قَرِيبًا

اور انعام دی ان کو ایک فتح نزدیک،

.18

وَمَغَانِمَ كَثِيرَةً يَأْخُذُونَهَا ۗ

اور بہت غنیمتیں، جو ان کو لیں گے۔

وَكَانَ اللَّهُ عَزِيزًا حَكِيمًا

اور ہے اﷲ زبردست حکمت والا۔

.19

وَعَدَكُمُ اللَّهُ مَغَانِمَ كَثِيرَةً تَأْخُذُونَهَا

وعدہ دیا ہے تم کو اﷲ نے بہت غنیمتوں کا، تم ان کو لو گے ،

فَعَجَّلَ لَكُمْ هَذِهِ وَكَفَّ أَيْدِيَ النَّاسِ عَنْكُمْ

سو شتاب ملا (فوری فتح) دی تم کو یہ، اور روکے لوگوں کے ہاتھ تم سے۔

وَلِتَكُونَ آيَةً لِلْمُؤْمِنِينَ وَيَهْدِيَكُمْ صِرَاطًا مُسْتَقِيمًا

اور تا (کہ) ایک نمونہ ہو قدرت کا مسلمانوں کے واسطے، اور چلائے تم کو سیدھی راہ۔

.20

وَأُخْرَى لَمْ تَقْدِرُوا عَلَيْهَا قَدْ أَحَاطَ اللَّهُ بِهَا ۚ

اور ایک فتح اور جو تمہارے بس میں نہ آئی، وہ اﷲ کے قابو میں ہے۔

وَكَانَ اللَّهُ عَلَى كُلِّ شَيْءٍ قَدِيرًا

اور ہے اﷲ ہر چیز کر سکتا۔

.21

وَلَوْ قَاتَلَكُمُ الَّذِينَ كَفَرُوا لَوَلَّوُا الْأَدْبَارَ ثُمَّ لَا يَجِدُونَ وَلِيًّا وَلَا نَصِيرًا

 اور اگر لڑتے تم سے کافر، تو پھیرتے پیٹھ، پھر نہ پائیں گے کوئی حمائیتی نہ مدد گار۔

.22

سُنَّةَ اللَّهِ الَّتِي قَدْ خَلَتْ مِنْ قَبْلُ ۖ

رسم (سنت) پڑی اﷲ کی، جو چلی آتی ہے پہلے سے۔

وَلَنْ تَجِدَ لِسُنَّةِ اللَّهِ تَبْدِيلًا  

اور تو نہ دیکھے گا اﷲ کی رسم (سنت) بدلتی۔

.23

وَهُوَ الَّذِي كَفَّ أَيْدِيَهُمْ عَنْكُمْ وَأَيْدِيَكُمْ عَنْهُمْ بِبَطْنِ مَكَّةَ مِنْ بَعْدِ أَنْ أَظْفَرَ كُمْ عَلَيْهِمْ ۚ

اوروہی ہے جس نے روک رکھے ان کے ہاتھ تم سے، اور تمہارے ہاتھ ان سے، بیچ شہر مکے کے،

پیچھے اس کے کہ تمہارے ہاتھ لگا دیئے وہ۔

وَكَانَ اللَّهُ بِمَا تَعْمَلُونَ بَصِيرًا

اور ہے اﷲ جو کرتے ہو دیکھتا۔

.24

هُمُ الَّذِينَ كَفَرُوا وَصَدُّوكُمْ عَنِ الْمَسْجِدِ الْحَرَامِ وَالْهَدْيَ مَعْكُوفًا أَنْ يَبْلُغَ مَحِلَّهُ ۚ

وہی ہیں جنہوں نے انکار کیا  اور روکا تم کو ادب والی مسجد سے  اور نیاز کی قربانی کو، بند پڑی (روکا) نہ پہنچے اپنی جگہ تک۔

وَلَوْلَا رِجَالٌ مُؤْمِنُونَ وَنِسَاءٌ مُؤْمِنَاتٌ لَمْ تَعْلَمُوهُمْ

اور اگر نہ ہوتے کتنے مرد ایمان والے اور کتنی عورتیں ایمان والیاں جو تم کومعلوم نہیں،

أَنْ تَطَئُوهُمْ فَتُصِيبَكُمْ مِنْهُمْ مَعَرَّةٌ بِغَيْرِعِلْمٍ ۖ

یہ خطرہ کہ ان کو پیس ڈالتے، پھر تم پر خرابی پڑتی بے خبری سے۔

لِيُدْخِلَ اللَّهُ فِي رَحْمَتِهِ مَنْ يَشَاءُ ۚ

کہ اﷲ کو داخل کرنا اپنی مہر (رحمت) میں جس کو چاہے۔

لَوْ تَزَيَّلُوا لَعَذَّبْنَا الَّذِينَ كَفَرُوا مِنْهُمْ عَذَابًا أَلِيمًا

اگر وہ لوگ ایک طرف ہو جاتے، تو آفت ڈالتے ہم منکروں کو دُکھ کی مار(عذاب) ۔

.25

إِذْ جَعَلَ الَّذِينَ كَفَرُوا فِي قُلُوبِهِمُ الْحَمِيَّةَ حَمِيَّةَ الْجَاهِلِيَّةِ  

جب رکھی منکروں نے اپنے دل میں پچ(ضد) ، نادانی کی ضد،

فَأَنْزَلَ اللَّهُ سَكِينَتَهُ عَلَى رَسُولِهِ وَعَلَى الْمُؤْمِنِينَ وَأَلْزَمَهُمْ كَلِمَةَ التَّقْوَى

پھر اُتارا اﷲ نے اپنی طرف کا چین اپنے رسول پر اور مسلمانوں پراور لگے (پابند) رکھا انکو ادب (تقویٰ) کی بات پر،

وَكَانُوا أَحَقَّ بِهَا وَأَهْلَهَا ۚ

 اور یہی تھے اس کے لائق، اور اس کام کے۔

وَكَانَ اللَّهُ بِكُلِّ شَيْءٍ عَلِيمًا

اور رہے (ہے) اﷲ ہر چیز سے خبردار۔

.26

لَقَدْ صَدَقَ اللَّهُ رَسُولَهُ الرُّؤْيَا بِالْحَقِّ ۖ

اﷲ نے سچ دکھایا ہے اپنے رسول کو خواب۔

لَتَدْخُلُنَّ الْمَسْجِدَ الْحَرَامَ إِنْ شَاءَ اللَّهُ آمِنِينَ مُحَلِّقِينَ رُءُوسَكُمْ وَمُقَصِّرِينَ لَا تَخَافُونَ ۖ

تحقیق (ضرور) تم داخل ہو رہو گے ادب والی مسجد (مسجدالحرام) میں، اگر اﷲ نے چاہا چین سے،

بال مونڈتے اپنے سروں کے، اور کترتے، بے خطرہ۔

فَعَلِمَ مَا لَمْ تَعْلَمُوا فَجَعَلَ مِنْ دُونِ ذَلِكَ فَتْحًا قَرِيبًا

پھر جانا جو تم نہیں جانتے، پھر ٹھہرا دی اس سے ورے (قریب) ایک فتح نزدیک۔

.27

هُوَ الَّذِي أَرْسَلَ رَسُولَهُ بِالْهُدَى وَدِينِ الْحَقِّ لِيُظْهِرَهُ عَلَى الدِّينِ كُلِّهِ ۚ

 وہی ہے جس نے بھیجا اپنا رسول راہ پر  اور سچے دین پر  کہ اوپر رکھے اس کو ہر دین سے۔

وَكَفَى بِاللَّهِ شَهِيدًا

اور بس ہے اﷲ حق ثابت کرنے والا۔

.28

مُحَمَّدٌ رَسُولُ اللَّهِ ۚ

محمد صلی اﷲ علیہ و سلم رسول اﷲ کے ۔

وَالَّذِينَ مَعَهُ أَشِدَّاءُ عَلَى الْكُفَّارِ رُحَمَاءُ بَيْنَهُمْ ۖ

اور جو اس کے ساتھ ہیں، زورآور ہیں کافروں پر، نرم دل ہیں آپس میں،

تَرَاهُمْ رُكَّعًا سُجَّدًا يَبْتَغُونَ فَضْلًا مِنَ اللَّهِ وَرِضْوَانًا ۖ

تو دیکھے ان کو رکوع میں اور سجدے میں، ڈھونڈتے ہیں اﷲ کا فضل اور اس کی خوشی۔

سِيمَاهُمْ فِي وُجُوهِهِمْ مِنْ أَثَرِ السُّجُودِ ۚ

بانا ان کا (پہچان انکی) ان کے منہیشانی)  پر ہے سجدے کے اثر سے۔

ذَلِكَ مَثَلُهُمْ فِي التَّوْرَاةِ ۚ

یہ کہاوت (مثال) ہے ان کی توریت میں،

وَمَثَلُهُمْ فِي الْإِنْجِيلِ كَزَرْعٍ أَخْرَجَ شَطْأَهُ فَآزَرَهُ فَاسْتَغْلَظَ فَاسْتَوَى عَلَى سُوقِهِ يُعْجِبُ الزُّرَّاعَ

اور کہاوت(مثال) ان کی انجیل میں، (اس طرح) جیسے کھیتی نے نکالا اپنا پٹھا (کونپل) ،پھر اس کی کمر مضبوط کی،

پھر موٹا ہوا، پھر کھڑا ہوا اپنے نال پر، خوش لگتا کھیتی والوں کو

لِيَغِيظَ بِهِمُ الْكُفَّارَ ۗ

تا (کہ) جلائے ان سے جی کافروں کا،

وَعَدَ اللَّهُ الَّذِينَ آمَنُوا وَعَمِلُوا الصَّالِحَاتِ مِنْهُمْ مَغْفِرَةً وَأَجْرًا عَظِيمًا

وعدہ دیا ہے اﷲ نے، انہیں سے جو یقین لائے ہیں اور کئے ہیں بھلے کام، معافی کا اور بڑے نیگ (اجر) کا۔

*********

.29

Copy Rights:

Zahid Javed Rana, Abid Javed Rana, Lahore, Pakistan

Visits wef 2016

AmazingCounters.com